جی آر جونیجو

صحرائے تھر کے لوگوں کے لئے طویل لاک ڈاؤن میں جنگلی پھل ‘پیرون’ کا پورے ضلع میں وافر مقدار میں بڑھنا کسی نعمت سے کم نہیں

فطرت نے صحرائے تھر کو بہت سے قدرتی وسائل سے نوازا ہے جیسے کوئلہ، چین گارا، سنگ خارا وغیرہ. اسکے علاوہ تھر میں بے تحاشہ حیوانات اور نباتات بھی موجود ہیں جو دنیا بھر میں مشہور ہیں

شدید گرمی کے دوران صحرائے تھر کے لوگوں کو فطرت کا ایک تحفہ ‘پیرون’ (کیریر) ہے۔ جیسے ہی تھر کے ریگستان میں گرم ہوا چلنے لگتی ہے، یہ پھل تیار ہوجاتا ہے

اسکا درخت پتلی اور پتیوں کے بغیر شاخوں کی جھاڑی جیسا دکھتا ہے. پتیاں صرف ان شاخوں پر ہوتی ہیں جو تازہ پھوٹی ہوں. پیرون عام طور پر بھوری اور زرد سبز رنگ کا ہوتا ہے. یہ ذائقہ میں بہت میٹھا ہوتا ہے اور اسکو مقامی لوگ اور جانور بہت پسند کرتے ہیں

پیرون صحرائے تھر کے لوگوں کے لئے معاش کا ایک بہت بڑا ذریعہ ہے ، کیونکہ وہ نہ صرف یہ تازہ پھل کھاتے ہیں بلکہ اسے خشک کرکے خشک سالی کے لئے بھی ذخیرہ کرتے ہیں۔ تھری لوگ اسے مقامی مارکیٹ میں بھی فروخت کرتے ہیں ۔ اسے دوستوں اور رشتہ داروں کو بطور تحفہ بھی پیش کیا جاتا ہے۔

.مقامی لوگ پیرون سے گڑ بھی تیار کرتے ہیں جو باقی شہروں میں گنے سے تیار کیا جاتا ہے

LEAVE A REPLY