بلوچستان کے ضلع کیچ میں اکیس لوگوں میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے. تاہم ابھی انیس لوگوں کی رپورٹس آنا باقی ہیں. مقامی نمائندگان کی جانب سے اس خدشے کا اظہار کیا گیا ہے کے کورونا وائرس کیچ ضلع کے دوسرے شہروں میں بھی تیزی سے پھیل سکتا ہے۔

کیچ سمیت بلوچستان کے ایک درجن سے زیادہ دور دراز علاقوں میں کورونا وائرس کا ایک بھی کیس سامنے نہیں آیا تھا. تاہم حکام نے خدشہ ظاہر کیا تھا کہ ان اضلاع میں وائرس سے متعلق جانچ کی سہولیات میں توسیع کے بعد ان علاقوں میں وائرس کے انفیکشن کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

کورونا وائرس کے حالیہ کیسز کی پیش نظر مقامی انتظامیہ نے ماسک پہننے، سماجی فاصلہ رکھنے اور صابن سے بار بار ہاتھ دھونے کی ہدایات جاری کی ہیں۔

کیچ تربت شہر کے کئی اسٹوروں میں مختلف ادویات اور بچوں کے دودھ کی شدید قلت ہوگئی ہے. ضلع کیچ کی سرحد ایران کے ساتھ بھی ملتی ہے اور اب یہاں کورونا وائرس کے کیسز سامنے آنے کے بعد صحت کی سہولیات کے فقدان میں یہ ضلع بری طرح متاثر ہوسکتا ہے۔

اس سے قبل پنجگور کے ضلع میں بھی انتیس کیسز سامنے آنے کے بعد مقامی انتظامیہ نے ایس او پر عمل درآمد کروانے کے لئے شہریوں کو ہدایات جاری کی تھیں. ان اضلاع کے کئی اسٹوروں میں مختلف ادویات اور بچوں کے دودھ کی شدید قلت ہوگئی ہے. ضلع کیچ کی سرحد ایران کے ساتھ بھی ملتی ہے اور اب یہاں کورونا وائرس کے کیسز سامنے آنے کے بعد صحت کی سہولیات کے فقدان میں یہ ضلع بری طرح متاثر ہوسکتا ہے۔

LEAVE A REPLY