دربار محل ایک تاریخی محل ہے جو پاکستان کے شہر بہاولپور میں واقع ہے۔ بہاولپور برطانوی ہندوستان میں ایک شاہی ریاست تھی، اور دربار محل بہاولپور کے نوابوں (حکمرانوں) کی شاہی رہائش گاہ کے طور پر کام کرتا تھا۔ دربار محل، جسے “شہزادے کا محل” بھی کہا جاتا ہے، 20ویں صدی کے اوائل میں تعمیر کیا گیا تھا۔ یہ اسلامی، مغل اور یورپی طرز تعمیر کے امتزاج کو ظاہر کرتا ہے۔

اس محل کو برطانوی ماہر تعمیرات ولیم پرڈن نے ڈیزائن کیا تھا اور اسے 1905 میں مکمل کیا گیا تھا۔ دربار محل پیچیدہ تفصیلات اور آرائشی سجاوٹ کے ساتھ ایک متاثر کن ڈھانچہ ہے۔ اس میں خوبصورت باغات، کشادہ صحن، اور شاندار سنگ مرمر کا کام ہے۔ محل کا اگواڑا نازک نقش و نگار، پھولوں کے نمونوں اور اسلامی نقشوں سے مزین ہے۔ محل کے اندر، آپ کو خوبصورت کمرے مل سکتے ہیں، بشمول شاہی کوارٹرز، استقبالیہ ہال، اور دربار ہال جہاں نواب دربار منعقد کرتے اور مہمانوں کی تفریح ​​کرتے تھے۔

اندرونی حصے کو فانوس، آئینے اور شاندار فرنشننگ سے سجایا گیا ہے، جو اس دور کی شان و شوکت کی عکاسی کرتا ہے۔ آج، دربار محل ایک مقبول سیاحوں کی توجہ کا مرکز ہے اور اس کا انتظام محکمہ آثار قدیمہ پاکستان کرتا ہے۔ یہ زائرین کو بہاولپور کے بھرپور ثقافتی ورثے اور تعمیراتی شان و شوکت کی ایک جھلک فراہم کرتا ہے۔ محل کی تلاش آپ کو بہاولپور کے حکمرانوں کے طرز زندگی کا تجربہ کرنے کی اجازت دیتی ہے۔